عوامی نیشنل پارٹی کا پارلیمانی انتخابات کا حصہ نہ بننے کا فیصلہ

63 / 100

عوامی نیشنل پارٹی کا پارلیمانی انتخابات کا حصہ نہ بننے کا فیصلہ

عوامی نیشنل پارٹی (اے این پی) نے پارلیمانی انتخابات کا حصہ نہ بننے کا فیصلہ کر لیا۔

سربراہ اے این پی اسفند یار ولی نے کہا کہ اے این پی کے اراکین کسی بھی اسمبلی، سینیٹ میں انتخابی عمل کا حصہ نہیں ہوں گے، اے این پی ملک میں سویلین بالادستی، جمہوریت اور پارلیمان کی مضبوطی چاہتی ہے۔

اسفند یار ولی نے کہا کہ موجودہ انتخابات میں جس طرح پیسوں کا استعمال کیا گیا اس کی نظیرنہیں ملتی، پارٹی موجودہ حالات میں صوبائی اسمبلیوں اور سینیٹ میں کسی کو رائے دینے کے حق میں نہیں۔

انہوں نے کہا کہ اکثریتی جماعتوں نےعہدوں کی آفرز کیں لیکن اے این پی اقتدار یا سیٹوں کی سیاست نہیں کرتی، اے این پی کا اصولی موقف یہی ہے کہ پہلے مینڈیٹ چوروں سے مینڈیٹ لے کر حقیقی نمائندوں کو دیا جائے۔

عوامی نیشنل پارٹی کے سربراہ اسفند یار ولی نے کہا کہ پارلیمان کے اندر کردار کے حوالے سے مزید فیصلے بعد میں کئے جائیں گے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept