بانی پی ٹی آئی پر 20 ارب روپے ہرجانہ کا دعویٰ خارج

66 / 100

بانی پی ٹی آئی پر 20 ارب روپے ہرجانہ کا دعویٰ خارج

اسلام آباد کی مقامی عدالت نے 10 سال بعد سابق چیف جسٹس افتخار چودھری کے ہتک عزت کیس کا فیصلہ سنا دیا۔

عدالت نے سابق چیف جسٹس افتخار محمد چودھری کا بانی پی ٹی آئی پر 20 ارب روپے ہرجانہ کا دعویٰ خارج کر دیا، 2013 انتخابی دھاندلی الزامات پر جنوری 2015 میں افتخار چودھری نے دعویٰ دائر کیا تھا۔

ہتک عزت دعویٰ میں کہا گیا تھا کہ بانی پی ٹی آئی نے عدلیہ کے خلاف بے بنیاد اور من گھڑت الزامات کی بوچھاڑ کی، دعویٰ کے مطابق 27 جون 2014 کے بیان میں بانی پی ٹی آئی نے توہین آمیز الفاظ استعمال کئے۔

عدالت کے مطابق ہتک عزت کا دعویٰ 6 ماہ 24 دن بعد 20 جنوری 2015 کو دائر ہوا، 2002 کے قانون کے مطابق چھ ماہ کے اندر دعویٰ دائر کرنا ضروری ہے۔

فیصلے میں کہا گیا ہے کہ قانونی طور پر توہین آمیز بیان کے چھ ماہ کے دوران دعویٰ دائر نہیں ہوا، اس بنیاد پر سابق چیف جسٹس افتخار چودھری کا دعویٰ خارج کیا جاتا ہے۔

ایڈیشنل سیشن جج حسینہ ثقلین نے 6 صفحات پر مشتمل تفصیلی جاری کر دیا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept