چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کو بھی دھمکی آمیز خط موصول

66 / 100

چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کو بھی دھمکی آمیز خط موصول

 

چیف جسٹس پاکستان جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کو بھی دھمکی آمیز خط موصول ہوگیا۔

 

ذرائع کے مطابق چیف جسٹس کے علاوہ 3 سپریم کورٹ کے ججز کو بھی دھمکی آمیز خط موصول ہوئے ہیں۔

 

ذرائع کا کہنا ہے کہ جسٹس اطہر من اللہ، جسٹس جمال مندوخیل اور جسٹس امین الدین کو خط موصول ہوئے۔ چاروں خط یکم اپریل کو سپریم کورٹ میں موصول ہوئے۔

 

ذرائع کے مطابق چاروں خطوط میں پاؤڈر پایا گیا اور دھمکی آمیز اشکال بنی ہوئی تھیں، خطوط کو کاؤنٹر ٹیررازم ڈیپارٹمنٹ کے حوالے کر دیا گیا ہے۔

 

ذرائع کا بتانا ہے کہ سینئر ترین جج جسٹس منصور علی شاہ کو بھی خط موصول ہوا ہے۔

 

سپریم کورٹ کے ججز کو گل شاد نامی خاتون کی طرف سے خط لکھے گئے ہیں۔

 

بعدازاں اسلام آباد پولیس حکام نے سپریم کورٹ کے رجسٹرار سے ملاقات کی ہے۔

 

ذرائع کے مطابق اسلام آباد پولیس نے سپریم کورٹ کے ججز کو ملے خطوط کا الگ سے مقدمہ درج کرنے کا فیصلہ کیا ہے اور یہ مقدمہ تھانہ سی ٹی ڈی میں درج کیا جائے گا۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept