بیلٹ پیپرزکی چھپائی کے بعد ترسیل شروع ہوگئی ہے، الیکشن کمیشن

اسلام آباد: الیکشن کمیشن آف پاکستان (ای سی پی) نے کہا ہے کہ 8 فروری کو شیڈول عام انتخابات کے لیے بیلٹ پیپرز کی چھپائی مکمل ہوگئی ہے اور اس کے بعد متعلقہ حلقوں کے لیے ترسیل کا عمل شروع کردیا گیا ہے۔

ترجمان الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری بیان کے مطابق الیکشن کمیشن نے 8فروری 2024 کو منعقد ہونے والے عام انتخابات کے لیے ملک کے تمام 859 انتخابی حلقوں کے 26 کروڑ بیلٹ پیپرز کی چھپائی کا کام تین سرکاری پریس اداروں میں مکمل کر لیا گیا۔

بیان میں کہا گیا کہ جن حلقوں میں عدالتی فیصلوں کے مطابق بیلٹ پیپرز کی چھپائی دوبارہ کرانا پڑی وہاں بھی بلیٹ پیپرز کی چھپائی کا کام بروقت مکمل کر لیا گیا ہے۔

ترجمان نے بتایا کہ پورے ملک میں بیلٹ پیپرز کی ترسیل کا عمل شروع ہوگیا ہے جو کل تک مکمل کر لیا جائے گا۔

انہوں نے کہا کہ 2018 کے عام انتخابات میں 22 کروڑ بیلٹ پیپرز چھاپے گئے تھے اوربیلٹ پیپرز کی طباعت پر800 ٹن اسپیشل سیکیورٹی کاغذ استعمال ہوا تھا جبکہ 2024 میں عام انتخابات کے لیے 26 کروڑ بیلٹ پیپرز چھاپے گئے اور اس کے لیے دو ہزار 170 ٹن کاغذ استعمال ہوا ہے۔

الیکشن کمیشن کے مطابق 2024 میں بیلٹ پیپرز میں اضافے کی بڑی وجہ انتخابی حلقوں میں امیدواروں کی زیادہ تعداد ہے جو 2018 کے انتخابات کے مقابلے میں ڈیڑھ گنا زیادہ ہے۔

ترجمان الیکشن کمیشن نے بتایا کہ بیلٹ پیپرز کی پرنٹنگ کے عمل کے دوران مختلف مراحل میں کئی چیلنجز سامنے آئیں، جن میں عدالتی مقدمے اور امیدواروں کی بڑی تعداد شامل ہے تاہم کمیشن نے محدود وقت اور چیلنجز کے باوجود اپنی ذمہ داری پوری کی اور بیلٹ پیپرز کی چھپائی کا کام بروقت مکمل کرکے اس امر کو یقینی بنایا ہے کہ 8 فروری کو انتخابات میں تمام ووٹرز اپنا حق رائے دہی استعمال کرسکیں۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept