عام انتخابات: پی ٹی آئی حمایت یافتہ آزاد امیدوار 92، ن لیگ 75 سیٹوں پر کامیاب

64 / 100

عام انتخابات: پی ٹی آئی حمایت یافتہ آزاد امیدوار 92، ن لیگ 75 سیٹوں پر کامیاب

عام انتخابات 2024ء کیلئے پولنگ ختم ہونے کے بعد غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج آنے کا سلسلہ جاری ہے، ملک بھر میں آزاد امیدواروں نے نامور سیاستدانوں کو پچھاڑتے ہوئے متعدد حلقوں میں سیٹیں اپنے نام کر لیں۔

قومی اسمبلی کی 265 سیٹوں میں 262 کے نتائج سامنے آ گئے، غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار 92 نشستیں لے کر سب سے آگے ہیں جب کہ مسلم لیگ ن 75 اور پیپلز پارٹی نے اب تک 54 نشستیں حاصل کی ہیں۔

اس کے علاوہ متحدہ قومی موومنٹ پاکستان (ایم کیو ایم) 17، آزاد امیدوار 9، مسلم لیگ (ق) 3 اور جمعیت علمائے اسلام 4، استحکام پاکستان پارٹی 2، مجلس وحدت المسلمین، مسلم لیگ ضیاء اور بلوچستان عوامی پارٹی ایک، ایک نشست حاصل کر چکی ہے۔

این اے 1 اپر چترال سے عبدالطیف کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 1 سے آزاد امیدوار عبدالطیف 61 ہزار 834 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے محمد طلحہ محمود 42 ہزار 987 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے فضل ربی 23 ہزار 723 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 2 سے امجد علی خان کامیاب

این اے 2 سوات 1 کے تمام 341 پولنگ سٹیشنز کا غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ آگیا جس کے مطابق آزاد امیدوار امجد علی خان 88938 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، یہاں سے پاکستان مسلم ليگ ن کے امیر مقام 37764 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 3 سے سلیم رحمان کامیاب

این اے 3 سوات 2 میں تمام 309 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار سلیم رحمٰن 81411 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ مسلم لیگ (ن) کے واجد علی خان 27861 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 4 سے سہیل سلطان کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 4 سوات 3 کے غیر حتمی اور غیر سرکاری نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار سہیل سلطان 88 ہزار 9 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے ہیں جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کے محمد سلیم خان 20 ہزار 890 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان تحریک انصاف پارلیمنٹرینز کے محمود خان 16 ہزار 813 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 5 سے صاحبزادہ صبغت اللہ کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 5 دیر بالا سے آزاد امیددوار صاحبزادہ صبغت اللہ 90 ہزار 261 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، جماعت صاحبزادہ طارق اللہ 48 ہزار 63 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے نجم الدین خان 37 ہزار 484 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 6 سے محمد بشیر خان کامیاب

این اے 6 لوئر دیر 1 سے آزاد امیدوار محمد بشیر خان 81 ہزار 60 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، جماعت اسلامی کے سراج الحق 56 ہزار 538 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے، عوامی نیشنل پارٹی کے بہادر خان 11 ہزار 544 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر کے حق دار ٹھہرے۔

این اے 7 سے محبوب شاہ کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 7 لوئر دیر 2 سے آزاد امیدوار محبوب شاہ نے 84 ہزار 843 ووٹ لے کر کامیابی حاصل کی جبکہ جماعت اسلامی کے محمد اسماعیل 31 ہزار 133 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے عالم زیب خان 20 ہزار 346 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 8

حلقہ این اے 8 میں امیدوار کے انتقال کے باعث الیکشن ملتوی کر دیئے گئے۔

این اے 9 سے جنید اکبر کامیاب

این اے 9 ملاکنڈ سے آزاد امیدوار جنید اکبر نے 1 لاکھ 13 ہزار 513 ووٹ لے کر میدان مار لیا، پی پی پی پی کے سید احمد علی شاہ 40 ہزار 740 ووٹ لے کر دوسرے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے کفایت اللہ 16 ہزار 767 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 10 سے گوہر علی خان کامیاب

الیکشن کمیشن کی ویب سائٹ کے مطابق این اے 10 بونیر میں تمام 397 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری وحتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار گوہر علی خان ایک لاکھ 10 ہزار 23 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے اور عوامی نیشنل پارٹی کے عبدالرؤف 30302 ووٹوں کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 11 سے امیر مقام کامیاب

این اے 11 شانگلہ کے 346 پولنگ سٹیشنز کے غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے مطابق امیر مقام کو کامیابی حاصل ہوئی ہے، انہوں نے 59863 ووٹ حاصل کر کے فتح حاصل کی، یہاں سے پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار سید فرین 54311 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 12 سے محمد ادریس کامیاب

این اے 12 کوہستان اپر کم کوہستان سے آزاد امیدوار محمد ادریس 26 ہزار 583 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے صلاح الدین 22 ہزار 43 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے محبوب اللہ جان 19 ہزار 790 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 13 سے محمد نواز خان کامیاب

این اے 13 بٹگرام کے تمام 278 پولنگ سٹیشنز کے مکمل غیرسرکاری و غیر حتمی نتائج کے تحت پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد نواز خان 24686 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، راہ حق پارٹی کےعطا محمد 18130 ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 14 سردار محمد یوسف زمان کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 14 مانسہرہ سے پاکستان مسلم لیگ ن کے سردار محمد یوسف زمان 1 لاکھ 15 ہزار 544 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد سلیم عمران 1 لاکھ 3 ہزار 333 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے محمد شجاع خان 13 ہزار 809 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 15 سے شہزاد محمد گستاسپ خان کامیاب

این اے 15 مانسہرہ بمع تورغر میں آزاد امیدوار شہزاد محمد گستاسپ خان نے 1 لاکھ 5 ہزار 249 ووٹ لے کر نواز شریف کو شکست دے دی، مسلم لیگ ن کے قائد محمد نواز شریف 80 ہزار 382 ووٹ لے کر دوسرے نمبر اور پی پی پی پی کے زرگل خان 5 ہزار 440 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 16 سے علی اصغر خان کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 16 ایبٹ آباد کے کل 464 پولنگ سٹیشنز کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق آزاد امیدوار علی اصغر خان 104993 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ مسلم لیگ (ن) کے مرتضیٰ جاوید عباسی 86276 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے17 سے علی خان جدون کامیاب

این اے17 ایبٹ آباد2 کے تمام 324 پولنگ سٹیشنز کے غیرحتمی غیرسرکاری نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار علی خان جدون 97177 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے، مسلم ليگ ن کے محبت خان اعوان 44522 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 18 سے عمر ایوب کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 18 ہری پور کے تمام 604 پولنگ سٹیشنز کے غیر حتمی اور غیر سرکاری نتائج کے مطابق آزاد امیدوار عمر ایوب 192948 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے ہیں جبکہ پاکستان مسلم لیگ (ن) کے بابر نواز خان 112389 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 19 سے اسد قیصر کامیاب

این اے 19 صوابی 1 میں تمام 385 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار اسد قیصر ایک لاکھ 15 ہزار 635 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے ہیں اور ان کے مدمقابل جمعیت علمائے اسلام (ف) کے فضل علی 45567 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 20 سے شیرام خان کامیاب

این اے 20 صوابی 2 سے آزاد امیدوار شیرام خان 1 لاکھ 22 ہزار 965 ووٹ لے کر الیکشن جیت گئے جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کے وارث خان 47 ہزار 535 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے عبدالرحیم خان 19 ہزار 528 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 21 سے مجاہد علی کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 21 مردان 1 سے آزاد امیدوار مجاہد علی 1 لاکھ 18 ہزار 49 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے اعظم خان 51 ہزار 797 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور عوامی نیشنل پارٹی کے احمد علی 31 ہزار 38 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 22 سے محمد عاطف کامیاب

الیکشن کمیشن کے مطابق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 22 مردان میں تمام 387 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری وحتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار محمد عاطف 114748 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، عوامی نیشنل پارٹی کے امیر حیدر اعظم خان کے 66159 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 23 سے علی محمد کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 23 مردان 3 سے تمام 317 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار علی محمد 102175 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے اور عوامی نیشنل پارٹی کے احمد خان 33910 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 24 سے انور تاج کامیاب

این اے 24 چارسدہ 1 سے آزاد امیدوار انور تاج 89 ہزار 801 ووٹ لے کر پہلے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے گوہر علی 48 ہزار 545 ووٹ لے کر دوسرے اور قومی وطن پارٹی کے آفتاب احمد خان شیرپاؤ 34 ہزار 415 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 25 سے فضل محمد خان کامیاب

این اے 25 چارشدہ 2 میں تمام 392 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری وحتمی نتائج کے مطابق آزاد امیدوار فضل محمد خان نے ایک لاکھ 713 ووٹ لے کر میدان مار لیا جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کے ایمل ولی خان 67876 ووٹ لے سکے۔

این اے 26 سے ساجد خان کامیاب

این اے 26 مہمند سے آزاد امیدوار ساجد خان نے 41 ہزار 489 ووٹ لے کر کامیابی سمیٹی، جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے محمد عارف 19 ہزار 930 ووٹ لے کر دوسرےے اور آزاد امیدوار بلال رحمان 16 ہزار 319 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 27 سے محمد اقبال خان کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 27 خیبر سے آزاد امیدوار محمد اقبال خان 85 ہزار 514 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار شاہ جی گل آفریدی نے 18 ہزار 832 ووٹ لے کر دوسری پوزیشن حاصل کی اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے حمید اللہ جان آفریدی 14 ہزار 950 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 28 سے نور عالم خان کامیاب

این اے 28 پشاور 1 سے جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے نور عالم خان نے 1 لاکھ 38 ہزار 389 ووٹ لے کر کامیابی حاصل کر لی جبکہ آزاد امیدوار ساجد نواز 65 ہزار 119 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے کرامت اللہ خان 14 ہزار 830 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 29 سے ارباب عامر ایوب کامیاب

این اے 29 پشاور 2 سے آزاد امیدوار ارباب عامر ایوب 68 ہزار 792 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کے ثاقب اللہ خان 18 ہزار 888 ووٹوں کے ساتھ دوسرےے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے اخونزادہ عرفان اللہ شاہ 10 ہزار 499 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 30 سے شاندانہ گلزار خان کامیاب

این اے 30 پشاور 3 میں تمام 267 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار شاندانہ گلزار خان 78971 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئیں، جمعیت علمائے اسلام کے ناصر خان 20950 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 31 سے شیر علی ارباب کامیاب

این اے 31 پشاور 4 سے آزاد امیدوار شیر علی ارباب 82 ہزار 985 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے ارباب عالمگیر خان 22 ہزار 543 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور 14 ہزار 560 ووٹوں کے ساتھ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار محمد سعید جان تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 32 سے آصف خان کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 32 پشاور 5 سے آزاد امیدوار آصف خان 1 لاکھ 22 ہزار 792 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ عوامی نیشنل پارٹی کے حاجی غلام احمد بلور 45 ہزار 846 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار حسین احمد مدنی 17 ہزار 665 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 33 سے سید شاہ احد علی کامیاب

این اے 33 نوشہرہ کے تمام 319 پولنگ اسٹیشنز کا غیر سرکاری نتیجہ موصول ہوگیا، این اے 33 پر آزاد امیدوار سید شاہ احد علی 90 ہزار 145 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے، پاکستان تحریک انصاف پارلیمنٹیرینز کے پرویز خٹک 25 ہزار 582 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 34 سے ذوالفقار علی کامیاب

این اے 34 نوشہرہ 2 سے آزاد امیدوار ذوالفقار علی 95 ہزار 692 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان تحریک انصاف پارلیمنٹیرین کے عمران خٹک 32 ہزار 698 ووٹ لے کر دوسرے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے پرویز خان خٹک 26 ہزار 55 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

مستند انتخابی نتائج کی لمحہ بہ لمحہ تفصیلات جاننے کیلئے یہاں کلک کریں

این اے 35 سے شہریار آفریدی کامیاب

این اے 35 کوہاٹ سے آزاد امیدوار شہریار آفریدی 1 لاکھ 28 ہزار 491 ووٹوں لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عباس آفریدی 57 ہزار 184 ووٹ لے کر دوسرے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے گوہر محمد خان 44 ہزار 278 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 36 سے یوسف خان کامیاب

این اے 36 ہنگو کم اورکزئی سے آزاد امیدوار یوسف خان 73 ہزار 76 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے عبید اللہ 34 ہزار 324 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار عبدالہادی 8679 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 37 سے حمید حسین کامیاب

قومی حلقہ این اے 37 کرم سے مجلس وحدت مسلمین پاکستان کے حمید حسین 58 ہزار 650 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، پی پی پی پی کے ساجد حسین طوری 54 ہزار 384 ووٹ لے کر دوسرے اور جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے عصمت اللہ 24 ہزار 892 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 38 سے شاہد احمد کامیاب

این اے 38 کرک سے آزاد امیدوار شاہد احمد 1 لاکھ 18 ہزار 56 ووٹ لے کر فتح سے ہمکنار ہوئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے شاہ عبدالعزیز 40 ہزار 965 ووٹ لے کر دوسرے اور عوامی نیشنل پارٹی کے حامد خان طوفان 15 ہزار 868 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 39 سے زاہد اکرم درانی کامیاب

این اے 39 بنوں سے جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار زاہد اکرم درانی 1 لاکھ 10 ہزار 675 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے، جماعت اسلامی پاکستان کے محمد ابراہیم خان 4999 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 40 سے مصباح الدین کامیاب

این اے 40 شمالی وزیرستان سے جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے مصباح الدین 42 ہزار 994 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار اورنگزیب خان 33 ہزار 852 ووٹ لے کر دوسرے اور نیشنل ڈیموکریٹک موومنٹ کے محسن جاوید 32 ہزار 768 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 41 سے شیر افضل خان کامیاب

قومی حلقے این اے 41 لکی مروت سے آزاد امیدوار شیر افضل خان 1 لاکھ 17 ہزار 988 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، جمعیت علمائے اسلام کے اسجد محمود نے 68 ہزار 303 ووٹ لے کر دوسری اور آزاد امیدوار سلیم سیف اللہ خان نے 46 ہزار 70 ووٹ لے کر تیسری پوزیشن حاصل کی۔

این اے 42 سے زبیر خان کامیاب

این اے 42 جنوبی وزیرستان، اپر، کم جنوبی وزیرستان لوئر سے آزاد امیدوار زبیر خان 20 ہزار 22 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد علی 16 ہزار 194 ووٹ لے کر دوسرے اور 13 ہزار 907 ووٹ لے کر جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے محمد جمال الدین تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 43 سے دلاور خان کنڈی کامیاب

این اے 43 ٹانک کم ڈی آئی خان سے آزاد امیدوار دلاور خان کنڈی کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے اسعد محمود 62 ہزار 730 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے، تیسرے نمبر پر تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار محمد رمضان نے 19 ہزار 979 ووٹ حاصل کیے۔

این اے 44 سے علی امین خان کامیاب

این اے 44 ڈی آئی خان 1 سے آزاد امیدوار علی امین خان 93 ہزار 443 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے فضل الرحمان 59 ہزار 922 ووٹ حاصل کر کے دوسرے جبکہ پی پی پی پی کے فیصل کریم کنڈی 35 ہزار 567 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 45 سے فتح اللہ خان کامیاب

این اے 45 ڈی آئی خان 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار فتح اللہ خان 56 ہزار 933 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے عبید الرحمان 48 ہزار 343 ووٹوں کے ساتھھ دوسرے اور آزاد امیدوار شعیب ناصر 23 ہزار 106 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 46 سے انجم عقیل خان کامیاب

این اے 46 اسلام آباد سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار انجم عقیل خان 81 ہزار 958 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پی پی پی پی کے راجہ عمران اشرف 7987 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 47 سے طارق فضل چودھری کامیاب

اسلام آباد کے حلقہ این اے 47 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے طارق فضل چودھری نے پاکستان تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار شعیب شاہین کو شکست دے دی، تمام 387 پولنگ سٹیشنز کے غیر سرکاری غیر حتمی نتیجہ کے مطابق ن لیگ کے طارق فضل چودھری 102502 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، محمد شعیب شاہین نے 86396 ووٹ حاصل کیے اور دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 48 سے راجہ خرم شہزاد انور کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 48 اسلام آباد 3 سے آزاد امیدوار راجہ خرم شہزاد انور 69 ہزار 699 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ تحریک لبیک پاکستان کے اظہر محمود 13 ہزار 200 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان عوامی قوت کے خاقان وحید خواجہ 3209 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 49 سے شیخ آفتاب احمد کامیاب

الیکشن کمیشن کی ویب سائٹ کے مطابق این اے 49 اٹک 1 میں تمام 461 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری وحتمی نتیجے کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے شیخ آفتاب احمد 119727 ووٹوں کے ساتھ کامیاب ہوگئے، آزاد امیدوار طاہر صادق 110230ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 50 سے ملک سہیل خان کامیاب

این اے 50 اٹک 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ملک سہیل خان 1 لاکھ 19 ہزار 75 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار ایمان وسیم 1 لاکھ 9 ہزار 189 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے حافظ محمد سعد 91 ہزار 709 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 51 سے راجہ اسامہ سرور کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 51 مری کم راولپنڈی سے پاکستان مسلم لیگ ن کے راجہ اسامہ سرور 1 لاکھ 49 ہزار 250 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار جاوید اختر عباسی 31 ہزار 809 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور راجہ خرم زمان 2966 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 52 سے راجہ پرویز اشرف کامیاب

این اے 52 راولپنڈی 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار راجہ پرویز اشرف نے 1 لاکھ 12 ہزار 265 ووٹوں کے ساتھ مسلم لیگ ن کے امیدوار راجہ محمد اخلاص جاوید کو شکست دے دی، راجہ محمد جاوید اخلاص نے 72 ہزار 62 ووٹ حاصل کیے۔

این اے 53 سے راجہ قمر الاسلام کامیاب

این اے 53 راولپنڈی 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار راجہ قمر الاسلام 72 ہزار 6 ووٹ لے کر کامیاب ٹھہرے جبکہ آزاد امیدوار اجمل صابر راجہ 58 ہزار 476 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور چودھری نثار علی خان 44 ہزار 72 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 54 سے عقیل ملک کامیاب

این اے 54 راولپنڈی 3 سے آزاد امیدوار عقیل ملک 85 ہزار 912 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار عذرا مسعود 73 ہزار 694 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار چودھری نثار علی خان 19 ہزار 93 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 55 سے ابرار احمد کامیاب

این اے 55 راوپنڈی 4 میں تمام 311 پولنگ سٹیشنز کے غیر سرکاری وحتمی نتیجے کے مطابق مسلم لیگ ن کے ابرار احمد 78542 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد بشارت راجہ 67101 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 56 سے حنیف عباسی کامیاب

حلقہ این اے 56 راولپنڈی کے غیر سرکاری غیر حتمی نتائج کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے حنیف عباسی کامیاب ہو گئے، لیگی امیدوار حنیف عباسی 96649 ووٹوں سے سرفہرست رہے جبکہ آزاد امیدوار شہریار ریاض 82613 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 57 سے دانیال چودھری کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 57 راولپنڈی 6 سے مسلم لیگ ن کے امیدوار دانیال چودھری 83 ہزار 331 ووٹ لے کر نشست جیت گئے، آزاد امیدوار سمابیہ طاہر نے 56 ہزار 789 ووٹ لے کر دوسرا اور جماعت اسلامی کے مرزا خالد محمود 8955 ووٹ لے کر تیسرا نمبر حاصل کیا۔

این اے 58 سے طاہر اقبال کامیاب

این اے 58 چکوال ایک میں تمام 459 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے طاہر اقبال ایک لاکھ 15 ہزار 974 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے اور ان کے مد مقابل آزاد امیدوار ایاز میر 102537 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 59 سے غلام عباس کامیاب

این اے 59 تلاگنگ چکوال میں تمام 467 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق مسلم لیگ (ن) کے سردار غلام عباس 141680 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے اور آزاد امیدوار رومان احمد 129116 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 60 سے بلال اظہر کیانی کامیاب

این اے 60 جہلم 1 سے مسلم لیگ ن کے امیدوار بلال اظہر کیانی 99 ہزار 948 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے، آزاد امیدوار حسن عدیل 90 ہزار 474 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار زاہد اختر 24 ہزار 273 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 61 سے چودھری فرخ الطاف کامیاب

این اے 61 جہلم 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے چودھری فرخ الطاف 88 ہزار 238 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار شوکت اقبال مرزا 84 ہزار 215 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہے، تیسرے نمبر پر آنے والے تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار عمران حیدر نے 28 ہزار 176 ووٹ حاصل کیے۔

این اے 62 سے محمد الیاس چودھری کامیاب

این اے 62 گجرات 1 سے تحریک انصاف کے حمایت یافتہ امیدوار محمد الیاس چودھری 97 ہزار 436 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ مسلم لیگ (ن) چودھری عابد علی 71 ہزار 154 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 63 سے حسین الٰہی

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 63 سے پاکستان مسلم لیگ کے حسین الٰہی 88 ہزار 69 ووٹ لے کر فاتح قرار پائے جبکہ آزاد امیدوار ساجد یوسف 81 ہزار 640 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے نوابزادہ غضنفر علی گل 56 ہزار 736 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 64 سے چوہدری سالک حسین کامیاب

این اے 64 گجرات سے پاکستان مسلم لیگ کے چوہدری سالک حسین 1 لاکھ 5 ہزار 205 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پرویز الٰہی کی اہلیہ آزاد امیدوار قیصرہ الٰہی 80 ہزار 946 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہیں، تحریک لبیک پاکستان کے چودھری عبدالکریم نے 20 ہزار 445 ووٹ لے کر تیسرا نمبر حاصل کیا۔

این اے 65 سے چودھری نصیر احمد عباس کامیاب

این اے 65 گجرات 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چودھری نصیر احمد عباس 90 ہزار 982 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ اازاد امیدوار سید وجاہت حسنین شاہ 82 ہزار 411 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے قمر زمان کائرہ 51 ہزار 282 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 66 سے محمد احمد چٹھہ کامیاب

این اے 66 وزیر آباد سے آزاد امیدوار محمد احمد چٹھہ 1 لاکھ 60 ہزار 676 ووٹ لے کر فاتح قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار نثار احمد چیمہ 1 لاکھ 633 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد اکرم 18 ہزار 968 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 67 سے انیقہ مہدی کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 67 حافظ آباد سے آزاد امیدوار انیقہ مہدی 2 لاکھ 8 ہزار 943 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ مسلم لیگ ن کی امیدوار سائرہ افضل تارڑ نے ایک لاکھ 83 ہزار 20 ووٹوں کے ساتھ دوسرا نمبر حاصل کیا۔

این اے 68 سے امتیاز احمد چودھری کامیاب

این اے 68 منڈی بہاؤالدین سے آزاد امیدوار امتیاز احمد چودھری نے 1 لاکھ 66 ہزار 93 ووٹ لے کر کامیابی اپنے نام کی جبکہ مسلم لیگ ن کے امیدوار مشاہد رضا 70 ہزار 926 ووٹ حاصل کر کے دوسرے اور پی پی پی پی کے امیدوار آصف بشیر 20 ہزار 390 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 69 سے ناصر اقبال بوسال کامیاب

این اے 69 منڈی بہاؤالدین 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ناصر اقبال بوسال 1 لاکھ 13 ہزار 285 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار کوثر پروین 1 لاکھ 8 ہزار 768 ووٹ حاصل کر کے دوسرے نمبر پر رہیں، آزاد امیدوار نذر محمد گوندل نے 28 ہزار 126 ووٹ لے کر تیسرا نمبر حاصل کیا۔

این اے 70 چوہدری ارمغان سبحانی کامیاب

سیالکوٹ 1 کے حلقہ این اے 70 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چوہدری ارمغان سبحانی 1 لاکھ 23 ہزار 437 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار حافظ حامد رضا 1 لاکھ 12 ہزار 117 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد شاہد 23 ہزار 928 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 71 سے خواجہ محمد آصف کامیاب

این اے 71 سیالکوٹ 2 سے مسلم لیگ ن کے امیدوار خواجہ محمد آصف 1 لاکھ 18 ہزار 566 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار ریحانہ امتیاز ڈار 1 لاکھ 272 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار محمد اسلم 11 ہزار 510 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 72 سے علی زاہد کامیاب

این اے 72 سیالکوٹ 3 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار علی زاہد 1 لاکھ 10 ہزار 190 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار چودھری امجد علی باجوہ ایک لاکھ 3 ہزار 792 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے شجاعت علی 43 ہزار 765 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 73 سے نوشین افتخار کامیاب

این اے 73 سیالکوٹ 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کی امیدوار نوشین افتخار 1 لاکھ 12 ہزار 143 ووٹ لے کر فاتح قرار پائیں جبکہ آزاد امیدوار علی اسجد ملہی 1 لاکھ 4 ہزار 67 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے طارق مقصود 20 ہزار 287 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 74 سے محمد اسلم گھمن کامیاب

این اے 74 سیالکوٹ 5 سے آزاد امیدوار محمد اسلم گھمن 1 لاکھ 30 ہزار 504 ووٹ لے کر کامیاب رہے جبکہ مسلم لیگ ن کے امیدوار رانا شمیم احمد خان 95 ہزار 988 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار سجاد حسین شاہ 25 ہزار 470 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 75 سے انوار الحق چوہدری کامیاب

این اے 75 نارووال 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار انوار الحق چوہدری 99 ہزار 625 ووٹوں کے ساتھ کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار طاہر علی جاوید 75 ہزار 626 ووٹوں کے ساتھھ دوسرے اور دانیال عزیز 50 ہزار 984 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 76 سے احسن اقبال کامیاب

غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 76 نارووال سے سابق وفاقی وزیر اور لیگی رہنما احسن اقبال کامیاب ہو گئے، احسن اقبال 136279 ووٹ لیکر کامیاب ہوئے جبکہ آزاد امیدوار کرنل ریٹائرڈ جاوید صفدر کاہلوں 109309 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 77 سے چوہدری محمود بشیر ورک کامیاب

این اے 77 گوجرانوالہ 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چوہدری محمود بشیر ورک 1 لاکھ 6 ہزار 451 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، آزاد امیدوار راشدہ طارق 91 ہزار 812 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہیں جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امتیاز صفدر وڑائچ 17 ہزار 172 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 78 سے محمد مبین عارف کامیاب

این اے 78 گوجرانوالہ 2 سے آزاد امیدوار محمد مبین عارف 1 لاکھ 6 ہزار 169 ووٹ لے کر فاتح قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے خرم دستگیر 88 ہزار 308 ووٹ لے کر دوسرے نمبر اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد کامران 14 ہزار 558 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 79 سے احسان اللہ ورک کامیاب

این اے 79 گوجرانوالہ 3 سے آزاد امیدوار احسان اللہ ورک 1 لاکھ 4 ہزار 23 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے ذوالفقار احمد 99 ہزار 635 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد حبیب 24 ہزار 323 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 80 سے شاہد عثمان کامیاب

این اے 80 گوجرانوالہ 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار شاہد عثمان 98 ہزار 160 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار لالہ اسد اللہ 95 ہزار 7 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد رفیق 18 ہزار 130 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 81 سے چودھری بلال اعجاز کامیاب

این اے 81 گوجرانوالہ 5 سے آزاد امیدوار چودھری بلال اعجاز نے 1 لاکھ 17 ہزار 717 ووٹ لے کر کامیاب حاصل کی، مسلم لیگ ن کے اظہر قیوم نہرا 1 لاکھ 9 ہزار 926 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے ذوالفقار علی 18 ہزار 555 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 82 سے مختار احمد ملک کامیاب

این اے 82 سرگودھا 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار مختار احمد ملک 1 لاکھ 8 ہزار 714 ووٹ لے کر کامیاب ٹھہرے جبکہ پی پی پی پی کے امیدوار ندیم افضل گوندل 87 ہزار 349 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار ہارون احسان پراچہ 60 ہزار 472 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 83 سے اسامہ احمد میلہ کامیاب

این اے 83 سرگودھا 2 سے آزاد امیدوار اسامہ احمد میلہ 1 لاکھ 36 ہزار 566 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محسن نواز رانجھا 98 ہزار 700 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد یونس 12 ہزار 333 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 84 سے شفقت عباس کامیاب

این اے 84 سرگودھا 3 سے آزاد امیدوار شفقت عباس 1 لاکھ 1 ہزار 944 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے لیاقت علی خان 77 ہزار 477 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے امیدوار 33 ہزار 867 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 85 سے ذوالفقار علی بھٹی کامیاب

این اے 85 سرگودھا 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ذوالفقار علی بھٹی 1 لاکھ 21 ہزار 1 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ آزاد امیدوار خداداد ایک لاکھ 11 ہزار 135 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے طارق محمود 9124 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 86 سے محمد مقداد علی خان کامیاب

این اے 86 سرگودھا 5 سے آزاد امیدوار محمد مقداد علی خان 1 لاکھ 5 ہزار 868 ووٹوں کے کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سید جاوید حسنین 94 ہزار 479 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے محمد جمشید 20 ہزار 951 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 87 سے ملک شاکر بشیر اعوان کامیاب

این اے 87 خوشاب 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ملک شاکر بشیر اعوان 1 لاکھ 17 ہزار 773 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار عمر اسلم خان ایک لاکھ 8 ہزار 308 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے محمد علی ساول 14 ہزار 998 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 88

الیکشن کمیشن نے این اے 88 خوشاب کا نتیجہ روک دیا، 15 فروری کو 26 پولنگ سٹیشن پر ری پولنگ ہوگی۔

این اے 89 سے محمد جمال احسن خان کامیاب

این اے 89 میانوالی 1 سے آزاد امیدوار محمد جمال احسن خان 2 لاکھ 17 ہزار 427 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ مسلم لیگ ن کے امیدوار عبید اللہ خان 34 ہزار 68 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار خرم حمید خان 12 ہزار 444 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 90 سے عمیر خان نیازی کامیاب

این اے 90 میانوالی 2 سے آزاد امیدوار عمیر خان نیازی 1 لاکھ 79 ہزار 820 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد حمیر حیات خان نیازی 51 ہزار 223 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار علی حیدر نور خان نیازی 23 ہزار 943 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 91 سے عبدالمجید خان کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 91 بھکر 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے عبدالمجید خان 85 ہزار 429 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سعید اکبر خان کے حصے 71 ہزار 773 ووٹ آئے۔

این اے 92 سے رشید اکبر خان کامیاب

این اے 92 بھکر 2 سے آزاد امیدوار رشید اکبر خان 1 لاکھ 42 ہزار 761 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ آزاد امیدوار محمد افضل خان 1 لاکھ 31 ہزار 176 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار ظہیر عباس نقوی 38 ہزار 748 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 93 سے غلام محمد کامیاب

این اے 93 چنیوٹ 1 سے آزاد امیدوار غلام محمد 94 ہزار 355 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار غلام عباس 59 ہزار 901 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تیسرے نمبر پر آزاد امیدوار غلام بی بی نے 42 ہزار 431 ووٹ لیے۔

این اے 94 سے قیصر احمد شیخ کامیاب

این اے 94 چنیوٹ 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار قیصر احمد شیخ 79 ہزار 546 ووٹوں کے ساتھ کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد خالد 72 ہزار 274 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے سید عنایت علی شاہ 69 ہزار 368 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 95 سے علی افضل ساہی کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 95 فیصل آباد 1 سے آزاد امیدوار علی افضل ساہی 1 لاکھ 44 ہزار 761 ووٹ لے کر نشست جیت گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے آزاد علی تبسم 93 ہزار 938 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے غلام میراں شاہ گیلانی 19 ہزار 128 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 96 سے رائے حیدر علی خاں کامیاب

این اے 96 فیصل آباد 2 سے آزاد امیدوار رائے حیدر علی خاں 1 لاکھ 34 ہزار 485 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے نواب شیر 92 ہزار 504 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے سید آصف اللہ شاہ بخاری 18 ہزار 477 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 97 سے محمد سعد اللہ کامیاب

این اے 97 فیصل آباد 3 سے آزاد امیدوار محمد سعد اللہ 72 ہزار 614 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے علی گوہر خان 70 ہزار 311 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے محمد خاں ندیم 32 ہزار 646 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 98 سے چودھری محمد شہباز بابر کامیاب

این اے 98 فیصل آباد 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چودھری محمد شہباز بابر 1 لاکھ 19 ہزار 443 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار ممتاز احمد 1 لاکھ 5 ہزار 434 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے رانا محمد فاروق سعید خاں 29 ہزار 409 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 99 سے عمر فاروق کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 99 فیصل آباد 5 سے آزاد امیدوار عمر فاروق 1 لاکھ 20 ہزار 686 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد قاسم فاروق 80 ہزار 377 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستانن کے امیدوار عمران خان 15 ہزار 96 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 100 سے نثار احمد کامیاب

این اے 100 فیصل آباد 6 سے آزاد امیدوار نثار احمد 1 لاکھ 31 ہزار 941 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار اور سابق وفاقی وزیر رانا ثنا اللہ خان ایک لاکھ 12 ہزار 639 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 101 سے رانا عاطف کامیاب

این اے 101 فیصل آباد 7 سے آزاد امیدوار رانا عاطف 1 لاکھ 34 ہزار 840 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عرفان احمد 89 ہزار 571 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد اسد اقبال 11 ہزار 444 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 102 سے چنگیز احمد خان کامیاب

این اے 102 فیصل آباد 8 سے آزاد امیدوار چنگیز احمد خان 1 لاکھ 32 ہزار 526 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے عابد شیر علی 1 لاکھ 320 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے راجہ سلیم عابد 9404 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 103 سے محمد علی سرفراز کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 103 فیصل آباد 9 سے آزاد امیدوار محمد علی سرفراز 1 لاکھ 47 ہزار 734 ووٹوں کے ساتھ کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے حاجی محمد اکرم انصاری 86 ہزار 662 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد غلام رسول 11 ہزار 833 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 104 سے محمد حامد رضا کامیاب

این اے 104 فیصل آباد 10 سے آزاد امیدوار صاحبزادہ محمد حامد رضا 1 لاکھ 28 ہزار 687 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے دانیال احمد 92 ہزار 594 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے حافظ محمد ابوبکر 14 ہزار 651 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 105 سے اسامہ حمزہ کامیاب

این اے 105 ٹوبہ ٹیک سنگھ 1 سے آزاد امیدوار اسامہ حمزہ 1 لاکھ 38 ہزار 194 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے چوہدری خالد جاوید ایک لاکھ 7 ہزار 840 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد مظہر محمود 14 ہزار 892 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 106 سے محمد جنید انوار چوہدری کامیاب

این اے 106 ٹوبہ ٹیک سنگھ 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد جنید انوار چوہدری 1 لاکھ 37 ہزار 629 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار خالد نواز ایک لاکھ 36 ہزار 924 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستانن کے محسن رضا 11 ہزار 306 ووٹوں کے ساتھھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 107 سے محمد ریاض خان کامیاب

این اے 107 ٹوبہ ٹیک سنگھ 3 سے آزاد امیدوار محمد ریاض خان 1 لاکھ 28 ہزار 870 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چوہدری اسد الرحمان 95 ہزار 575 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار حیدر علی 16 ہزار 39 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 108 سے محمد محبوب سلطان کامیاب

این اے 108 جھنگ 1 سے آزاد امیدوار محمد محبوب سلطان 1 لاکھ 69 ہزار 578 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگگ ن کے مخدوم سید فیصل صالح حیات ایک لاکھ 34 ہزار 270 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 109 سے وقاص اکرم کامیاب

این اے 109 جھنگ 2 سے آزاد امیدوار وقاص اکرم 1 لاکھ 76 ہزار 586 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے محمد یعقوب شیخ 61 ہزار 787 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان راہ حق پارٹی کے محمد احمد 36 ہزار 573 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 110 سے محمد امیر سلطان کامیاب

این اے 110 جھنگ 3 سے آزاد امیدوار محمد امیر سلطان 1 لاکھ 99 ہزار 590 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے محمد آصف معاطیہ 1 لاکھ 4 ہزار 171 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 111 سے محمد ارشد ساہی کامیاب

این اے 111 ننکانہ صاحب 1 سے آزاد امیدوار محمد ارشد ساہی 1 لاکھ 13 ہزار 709 ووٹ لے کر جیت گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے محمد برجیس طاہر 93 ہزار 467 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد رضوان 25 ہزار 345 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 112 سے شذرہ منصب علی خان کھرل کامیاب

این اے 112 ننکانہ صاحب 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کی امیدوار شذرہ منصب علی خان کھرل 1 لاکھ 5 ہزار 646 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ آزاد امیدوار اعجاز احمد شاہ 93 ہزار 316 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے ابرار احمد 20 ہزار 894 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 113 سے احمد عتیق انور کامیاب

این اے 113 شیخوپورہ 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار احمد عتیق انور 1 لاکھ 19 ہزار 407 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار راحت امان اللہ بھٹی 90 ہزار 872 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد نعمان خالد 26 ہزار 257 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 114 سے رانا تنویر حسین کامیاب

این اے 114 شیخوپورہ 2 سے مسلم لیگ ن کے امیدوار رانا تنویر حسین 1 لاکھ 39 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ آزاد امیدوار ارشد محمود چوہدری 82 ہزار 26 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے آصف محمود 37 ہزار 329 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 115 سے خرم شہزاد ورک کامیاب

این اے 115 شیخوپورہ 3 سے آزاد امیدوار خرم شہزاد ورک 1 لاکھ 30 ہزار 255 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار جاوید لطیف 94 ہزار 144 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار ندیم ظفر 28 ہزار 956 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 116 سے خرم منور منج کامیاب

این اے 116 شیخوپورہ 4 سے آزاد امیدوار خرم منور منج 1 لاکھ 34 ہزار 959 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے سردار محمد عرفان ڈوگر 90 ہزار 225 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے سید ظہیر الحسن بخاری 43 ہزار 671 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 117 سے عبدالعلیم خان کامیاب

این اے 117 لاہور سے استحکام پاکستان پارٹی کے عبدالعلیم خان 91 ہزار 489 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار علی اعجاز 80 ہزار 838 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے سیف الرحمان 38 ہزار 161 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 118 سے حمزہ شہباز کامیاب

لاہور کے حلقہ این اے 118 کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق مسلم لیگ ن کے امیدوار حمزہ شہباز ایک لاکھ 5 ہزار 960 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ ان کی مدمقابل آزاد امیدوار عالیہ حمزہ نے ایک لاکھ 803 ووٹ حاصل کیے۔

این اے 119 سے مریم نواز کامیاب

غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے مطابق حلقہ این اے 119 لاہور سے مسلم لیگ ن کی امیدوار مریم نواز فاتح قرار پائیں، مریم نواز نے 83 ہزار 855 ووٹ حاصل کیے جبکہ ان کے مدمقابل آزاد امیدوار شہزاد فاروق 68 ہزار 376 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 120 سے سردار ایاز صادق کامیاب

این اے 120 لاہور 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سردار ایاز صادق 68 ہزار 143 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار عثمان حمزہ 49 ہزار 222 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے راشد علی 24 ہزار 160 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 121 سے وسیم قادر کامیاب

این اے 121 لاہور 5 میں تمام 299 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق آزاد امیدوار وسیم قادر 78703 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے اور انہوں نے مسلم لیگ ن کے شیخ روحیل اصغر کو شکست دی، لیگی امیدوار 70597ووٹ لینے میں کامیاب ہوئے۔

این اے 122 سے سردار لطیف کھوسہ کامیاب

لاہور کے حلقہ این اے 122 میں مسلم لیگ ن کے مضبوط امیدوار خواجہ سعد رفیق شکست کھا گئے، لیگی امیدوار خواجہ سعد رفیق کو آزاد امیدوار سردار لطیف کھوسہ نے بڑے مارجن سے شکست دی، این اے 122 سے آزاد امیدوار سردار لطیف کھوسہ ایک لاکھ 17 ہزار 109 لے کر کامیاب ہوئے جبکہ لیگی امیدوار خواجہ سعد رفیق 77 ہزار 907 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 123 سے شہباز شریف کامیاب

غیر حتمی و غیر سرکاری نتیجے کے مطابق سابق وزیراعظم شہباز شریف لاہور سے قومی اسمبلی کی سیٹ بچانے میں کامیاب ہو گئے، انہوں نے حلقہ این اے 123 سے 63 ہزار 953 ووٹ لیے، شہباز شریف کے مد مقابل آزاد امیدوار افضال عظیم پاہٹ 48 ہزار 486 ووٹ ہی لے سکے۔

این اے 124 سے رانا مبشر اقبال کامیاب

لاہور کے حلقہ این اے 124 کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق مسلم لیگ ن کے رانا مبشر اقبال نے 55387 ووٹوں کے ساتھ میدان مار لیا جبکہ آزاد امیدوار ضمیر احمد جھیڈو 43594 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 125 سے محمد افضل کامیاب

این اے 125 لاہور 9 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد افضل 65 ہزار 102 ووٹ لے کرر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار جاوید عمر 51 ہزار 144 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے خرم شہزاد 25 ہزار 490 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہی۔

این اے 126 سے سیف الملوک کھوکھر کامیاب

حلقہ این اے 126 کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق مسلم لیگ ن کے امیدوار سیف الملوک کھوکھر نے 67 ہزار 717 ووٹ لے کر سیٹ بچا لی جبکہ ان کے مدمقابل آزاد امیدوار ملک توقیر عباس کھوکھر 60 ہزار 479 لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 127 سے عطا اللہ تارڑ کامیاب

این اے 127 لاہور 11 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عطا اللہ تارڑ 98 ہزار 210 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار ملک ظہیر عباس 82 ہزار 230 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار و سابق وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری 15 ہزار 5 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 128 سے محمد عون ثقلین کامیاب

این اے 128 لاہور 12 سے استحکام پاکستان پارٹی کے محمد عون ثقلین 1 لاکھ 72 ہزار 576 ووٹوں کے ساتھ کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سلمان اکرم راجہ ایک لاکھ 59 ہزار 24 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور 14 ہزار 654 ووٹوں کے ساتھ تحریک لبیک پاکستان کے عاصم ارشاد خان تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 129 سے میاں محمد اظہر کامیاب

حلقہ این اے 129 سے موصول شدہ غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امید میاں محمد اظہر نے لیگی امیدوار میاں نعمان کو بڑے مارجن سے ہرا دیا، تحریک انصاف کے حمایت یافتہ امیدوار میاں اظہر نے ایک لاکھ 3 ہزار 718 ووٹوں سے فتح اپنے نام کر لی، مسلم لیگ ن کے امیدوار حافظ میاں نعمان 71 ہزار 540 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 130 سے نواز شریف کامیاب

ملک کے سب سے بڑے ٹاکرے میں مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف نے این اے 130 سے یاسمین راشد کو شکست دیدی، غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے مطابق قائد مسلم لیگ ن نواز شریف ایک لاکھ 71 ہزار 24 ووٹ لیکر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ پی ٹی آئی کی حمایت یافتہ امیدوار ڈاکٹر یاسمین راشد کو ایک لاکھ 15 ہزار 43 ووٹ ملے۔

این اے 131 سے سعد وسیم کامیاب

این اے 131 قصور 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سعد وسیم 1 لاکھ 8 ہزار 714 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد مقصود صابر انصاری 77 ہزار 966 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے چودھری منظور احمد 44 ہزار 478 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 132 سے میاں محمد شہباز شریف کامیاب

این اے 132 قصور 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار و سابق وزیر اعظم میاں محمد شہباز شریف 1 لاکھ 37 ہزار 231 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ آزاد امیدوار سردار محمد حسین ڈوگر 1 لاکھ 11 ہزار 116 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے فقیر حسین 22 ہزار 245 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 133 سے عظیم الدین زاہد کامیاب

این اے 133 قصور 3 سے آزاد امیدوار عظیم الدین زاہد 1 لاکھ 30 ہزار 696 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے رانا محمد اسحاق خاں 1 لاکھ 19 ہزار 939 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے غلام مرتضیٰ 21 ہزار 977 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 134 سے رانا محمد حیات خاں کامیاب

این اے 134 قصور 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے رانا محمد حیات خاں 1 لاکھ 41 ہزار 841 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سدرہ فیصل 76 ہزار 205 اور آزاد امیدوار سردار احمد ایاز نکئی 47 ہزار 806 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے135 سے ندیم عباس ربیرہ کامیاب

این اے135 اوکاڑہ1 کے تمام 370 پولنگ سٹیشنز کے غیرحتمی غیر سرکاری نتیجے کے مطابق مسلم ليگ ن کے ندیم عباس ربیرہ 107862 ووٹ لےکر کامیاب ہو گئے، آزاد امیدوار ملک محمد اکرم بھٹی 90443 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 136 سے ریاض الحق کامیاب

این اے 136 اوکاڑہ 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ریاض الحق 1 لاکھ 27 ہزار 764 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار راؤ حسن سکندر 80 ہزار 69 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے منور جاوید 11 ہزار 976 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 137 سے سید رضا علی گیلانی کامیاب

این اے 137 اوکاڑہ 3 سے آزاد امیدوار سید رضا علی گیلانی 1 لاکھ 31 ہزار 925 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار راؤ محمد اجمل خاں 1 لاکھ 5 ہزار 381 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان 17 ہزار 374 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 138 سے محمد معین وٹو کامیاب

این اے 138 اوکاڑہ 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد معین وٹو 1 لاکھ 22 ہزار 678 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار میاں منظور احمد خان وٹو 79 ہزار 692 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار ارشد علی 48 ہزار 190 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 139 سے احمد رضا مانیکا کامیاب

این اے 139 پاکپتن 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار احمد رضا مانیکا 1 لاکھ 21 ہزار 383 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار راؤ عمر ہاشم خان 1 لاکھ 16 ہزار 493 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار غلام محی الدین 26 ہزار 108 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 140 سے رانا ارادت شریف خاں کامیاب

این اے 140 پاکپتن 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار رانا ارادت شریف خاں 1 لاکھ 39 ہزار 322 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار راجہ طالح سعید 1 لاکھ 4 ہزار 762 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے وسیم ظفر 27 ہزار 1 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 141 سے عمران احمد شاہ کامیاب

این اے 141 ساہیوال 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سید عمران احمد شاہ 1 لاکھ 18 ہزار 240 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار رانا عامر شہزاد طاہر 1 لاکھ 7 ہزار 56 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے محمد ذکی 25 ہزار 627 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 142 سے عثمان علی کامیاب

این اے 142 ساہیوال 2 سے آزاد امیدوار عثمان علی 1 لاکھ 7 ہزار 496 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے چوہدری محمد اشرف 96 ہزار 125 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار رائے منصف شبیر احمد 29 ہزار 349 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 143 سے رائے حسن نواز خاں کامیاب

این اے 143 ساہیوال 3 سے آزاد امیدوار رائے حسن نواز خاں 1 لاکھ 47 ہزار 147 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد طفیل 83 ہزار 480 ووٹ لے کر دوسرے اور استحکام پاکستان پارٹی کے امیدوار ملک نعمان احمد لنگڑیال 32 ہزار 121 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 144 سے محمد رضا حیات ہراج کامیاب

این اے 144 خانیوال 1 سے آزاد امیدوار محمد رضا حیات ہراج 1 لاکھ 18 ہزار 999 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سید عابد حسین امام 78 ہزار 296 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سید محمد مختار حسین 28 ہزار 827 ووٹ حاصل کر کے تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 145 سے محمد خان ڈاہا کامیاب

این اے 145 خانیوال 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد خان ڈاہا 1 لاکھ 2 ہزار 911 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار عابد محمود 56 ہزار 188 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار حامد یار ہراج 53 ہزار 116 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 146 سے ظہور حسین قریشی کامیاب

این اے 146 خانیوال 3 سے آزاد امیدوار ظہور حسین قریشی 1 لاکھ 12 ہزار 666 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار پیر محمد اسلم بودلہ صدیقی 1 لاکھ 4 ہزار 739 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار محمد عمران شاہ 15 ہزار 415 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 147 سے چوہدری افتخار نذیر کامیاب

این اے 147 خانیوال 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چوہدری افتخار نذیر 1 لاکھ 7 ہزار 708 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار نوید حمید 83 ہزار 394 ووٹ لے کر دوسرے اور استحکام پاکستان پارٹی کے محمد ایاز خان نیازی 61 ہزار 459 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 148 سے سید یوسف رضا گیلانی کامیاب

این اے 148 ملتان 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار سید یوسف رضا گیلانی 67 ہزار 326 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار تیمور الطاف ملک 67 ہزار 33 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار احمد حسین 57 ہزار 989 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 149 سے ملک عامر ڈوگر کامیاب

استحکام پاکستان پارٹی (آئی پی پی) کے سربراہ جہانگیر ترین حلقہ این اے 149 سے ہار گئے، این اے 149 کے غیر حتمی و غیر سرکاری نتائج کے مطابق تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار ملک عامر ڈوگر 143613 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ سربراہ استحکام پاکستان پارٹی جہانگیر خان ترین 50166 ووٹ ہی لے سکے اور پیپلز پارٹی کے رضوان ہانس 14625 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 150 سے مخدوم زین حسین قریشی کامیاب

این اے 150 ملتان 3 سے آزاد امیدوار مخدوم زین حسین قریشی 1 لاکھ 26 ہزار 770 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن 76 ہزار 785 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے رانا محمود الحسن 25 ہزار 552 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 151 سے سید علی موسیٰ گیلانی کامیاب

این اے 151 ملتان 4 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار اور سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی کے صاحبزادے سید علی موسیٰ گیلانی 79 ہزار 80 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار مہر بانو قریشی 71 ہزار 649 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عبدالغفار 71 ہزار 463 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 152 سے سید عبدالقادر گیلانی کامیاب

این اے 152 ملتان 5 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار سید عبدالقادر گیلانی 96 ہزار 998 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سید جاوید علی شاہ 71 ہزار 259 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار محمد عمران شوکت خان 62 ہزار 82 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 153 سے رانا محمد قاسم نون کامیاب

این اے 153 ملتان 6 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار رانا محمد قاسم نون 95 ہزار 114 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار دیوان سید محمد عباس بخاری 49 ہزار 7 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار قاسم عباس خان 47 ہزار 831 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 154 سے رانا محمد فراز نون کامیاب

این اے 154 لودھراں 1 سے آزاد امیدوار رانا محمد فراز نون 1 لاکھ 34 ہزار 937 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عبدالرحمان خاں کانجو 1 لاکھ 28 ہزار 438 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے امیدوار امداد اللہ عباسی 17 ہزار 117 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 155 سے صدیق خان بلوچ کامیاب

لودھراں سے استحکام پاکستان پارٹی (آئی پی پی) کے سربراہ جہانگیر ترین کو این اے 155 سے بھی شکست ہو گئی، این اے 155 لودھراں 2 کے تمام 369 پولنگ سٹیشنز کے نتائج کے مطابق مسلم ليگ ن کے صدیق خان بلوچ 117671 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ استحکام پاکستان پارٹی (آئی پی پی) کے جہانگیر ترین 71128 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 156 سے عائشہ نذیر کامیاب

این اے 156 وہاڑی 1 سے آزاد امیدوار عائشہ نذیر 1 لاکھ 19 ہزار 820 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار چوہدری نذیر احمد 90 ہزار 353 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار شہباز احمد 18 ہزار 673 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 157 سے ساجد مہدی کامیاب

این اے 157 وہاڑی 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ساجد مہدی 99 ہزار 332 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سبین صفدر 79 ہزار 996 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار بلال اکبر بھٹی 31 ہزار 308 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 158 سے بیگم تہمینہ دولتانہ کامیاب

این اے 158 وہاڑی 3 سے پاکستان مسلم لیگ ن کی امیدوار بیگم تہمینہ دولتانہ 1 لاکھ 11 ہزار 196 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ آزاد امیدوار طاہر اقبال 1 لاکھ 3 ہزار 52 ووٹ لے کر دوسرے نمبر اور تحریک لبیک پاکستان کے سید محمد اسماعیل شاہ 18 ہزار 752 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 159 سے اورنگزیب خان کھچی کامیاب

این اے 159 وہاڑی 4 سے آزاد امیدوار اورنگزیب خان کھچی 1 لاکھ 16 ہزار 198 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سعید احمد خان منیس 96 ہزار 191 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد اقبال 12 ہزار 658 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 160 سے محمد عبدالغفار وٹو کامیاب

این اے 160 بہاولنگر 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد عبدالغفار وٹو 1 لاکھ 18 ہزار 116 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سید محمد اصغر 1 لاکھ 10 ہزار 294 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے حافظ محمد سعد 21 ہزار 953 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 161 سے عالم داد لالیکا کامیاب

این اے 161 بہاولنگر 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عالم داد لالیکا 1 لاکھ 649 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار شاہد امین 81 ہزار 655 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار آفتاب احمد جوئیہ 25 ہزار 693 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 162 سے احسان الحق باجوہ کامیاب

این اے 162 بہاولنگر 3 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار احسان الحق باجوہ 1 لاکھ 14 ہزار 284 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار خلیل احمد 97 ہزار 871 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ضیا الحق شہید کے امیدوار محمد اللہ داد چیمہ 24 ہزار 440 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 163 سے محمد اعجاز الحق کامیاب

این اے 163 بہاولنگر 4 سے پاکستان مسلم لیگ ضیا الحق شہید کے امیدوار محمد اعجاز الحق 84 ہزار 312 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار شوکت محمود 75 ہزار 115 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے نور الحسن تنویر 72 ہزار 145 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 164 سے میاں ریاض حسین پیرزادہ کامیاب

این اے 164 بہاولپور 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار میاں ریاض حسین پیرزادہ 1 لاکھ 23 ہزار 360 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار ملک اعجاز احمد گڈن 1 لاکھ 17 ہزار 140 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے سید عرفان احمد گردیزی 12 ہزار 565 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 165 سے چوہدری طارق بشیر چیمہ کامیاب

این اے 165 بہاولپور 2 سے پاکستان مسلم لیگ کے امیدوار چوہدری طارق بشیر چیمہ 1 لاکھ 16 ہزار 554 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سعود مجید 1 لاکھ 5 ہزار 313 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار بشارت علی 50 ہزار 339 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 166 سے مخدوم سید سمیع الحسن گیلانی کامیاب

این اے 166 بہاولپور 3 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار مخدوم سید سمیع الحسن گیلانی 62 ہزار 148 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار پرنس بہاول عباس عباسی 48 ہزار 599 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے مخدوم سید علی حسن گیلانی 48 ہزار 375 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 167 سے محمد عثمان اویسی کامیاب

این اے 167 بہاولپور 4 کے تمام 301 پولنگ سٹیشنز کے غیر حتمی غیر سرکاری نتیجے کے مطابق مسلم ليگ ن کے محمد عثمان اویسی 78970 ووٹ لےکرکامیاب ہوگئے، آزاد امیدوار ملک عامر یار وارن 42500 ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر رہے۔

مستند انتخابی نتائج کی لمحہ بہ لمحہ تفصیلات جاننے کیلئے یہاں کلک کریں

این اے 168 سے ملک محمد اقبال کامیاب

این اے 168 بہاولپور 5 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار ملک محمد اقبال 1 لاکھ 24 ہزار 529 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سمیع اللہ چودھری 52 ہزار 270 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے امیدوار حسین احمد مدنی 9682 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 169 سے سید مرتضیٰ محمود کامیاب

این اے 169 رحیم یارخان 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے سید مرتضیٰ محمود 80 ہزار 421 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سید مبین احمد 73 ہزار 312 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار راجہ محمد سلیم 70 ہزار 677 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 170 سے میاں غوث محمد کامیاب

این اے 170 رحیم یارخان 2 سے آزاد امیدوار میاں غوث محمد 1 لاکھ 13 ہزار 684 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار شیخ فیاض الدین 78 ہزار 615 ووٹ لے کر دوسرے اور پی پی پی پی کے سید حامد سعید کاظمی 35 ہزار 764 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 171 سے ممتاز مصطفےٰ کامیاب

این اے 171 رحیم یارخان 3 سے آزاد امیدوار ممتاز مصطفےٰ ایک لاکھ 3 ہزار 832 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار مخدوم ہاشم جواں بخت 56 ہزار 28 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے مخدوم طاہر رشید الدین 49 ہزار 18 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 172 سے جاوید اقبال کامیاب

این اے 172 رحیم یارخان 4 سے آزاد امیدوار جاوید اقبال 1 لاکھ 29 ہزار 307 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے میاں امتیاز احمد 84 ہزار 527 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے چوہدری ظفر اقبال وڑائچ 20 ہزار 964 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 173 سے سید مصطفےٰ محمود کامیاب

این اے 173 رحیم یارخان 5 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے سید مصطفےٰ محمود 83 ہزار 120 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد نبیل ڈاہر 80 ہزار 304 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے عزیر طارق 47 ہزار 298 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 174 سے محمد اظہر خاں لغاری کامیاب

این اے 174 رحیم یارخان 6 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے محمد اظہر خاں لغاری 78 ہزار 680 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پی پی پی پی کے سید عثمان محمود 71 ہزار 559 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار رئیس محمد محبوب احمد 67 ہزار 358 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 175 سے جمشید احمد کامیاب

این اے 175 مظفر گڑھ 1 سے آزاد امیدوار جمشید احمد 1 لاکھ 13 ہزار 253 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پی پی پی پی کے امیدوار مہر ارشاد احمد خان 71 ہزار 997 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار حماد نواز خان 47 ہزار 350 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 176 سے نوابزادہ افتخار احمد خان بابر کامیاب

این اے 176 مظفر گڑھ 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے نوابزادہ افتخار احمد خان بابر 53 ہزار 801 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے مخدوم زادہ سید باسط احمد سلطان 43 ہزار 646 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار نازیہ 35 ہزار 518 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہیں۔

این اے 177 سے محمد معظم علی خان کامیاب

این اے 177 مظفر گڑھ 3 سے آزاد امیدوار محمد معظم علی خان 1 لاکھ 13 ہزار892 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ کی امیدوار سیدہ شہر بانو بخاری 67 ہزار 964 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار راؤ عاطف علی خان 15 ہزار 654 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 178 سے عامر طلال خان کامیاب

این اے 178 مظفر گڑھ 4 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عامر طلال خان 1 لاکھ 13 ہزار 816 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار عبدالقیوم خان جتوئی 87 ہزار 932 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے محمد شفیع خان 9944 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 179 سے محمد شبیر علی قریشی کامیاب

این اے 179 کوٹ ادو1 سے آزاد امیدوار محمد شبیر علی قریشی 83 ہزار 740 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے ملک غلام قاسم ہنجرا 66 ہزار 440 ووٹ لے کر دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے سید محمد سرور شاہ 8104 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 180 سے فیاض حسین کامیاب

این اے 180 کوٹ ادو 2 سے آزاد امیدوار فیاض حسین 96 ہزار 220 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائے جبکہ پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے رضا ربانی کھر 49 ہزار 461 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار اللہ بچایا 18 ہزار 960 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 181 سے عنبر مجید کامیاب

این اے 181 لیہ 1 سے آزاد امیدوار عنبر مجید 1 لاکھ 20 ہزار 499 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ پاکستان مسلم لیگ کے امیدوار صاحبزادہ فیض الحسن 95 ہزار 81 ووٹ لے کر دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار 70 ہزار 912 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 182 سے اویس حیدر جکھڑ کامیاب

این اے 182 لیہ 2 سے آزاد امیدوار اویس حیدر جکھڑ 1 لاکھ 41 ہزار 869 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار 1 لاکھ 18 ہزار 654 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے محمد رمضان 21 ہزار 365 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 183 سے خواجہ شیراز محمود کامیاب

این اے 183 تونسہ سے آزاد امیدوار خواجہ شیراز محمود 1 لاکھ 34 ہزار 48 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار محمد امجد فاروق خان کھوسہ 87 ہزار 203 ووٹ لے کر دوسرے اور جمعیت علما اسلام پاکستان کے امیدوار 14 ہزار 219 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 184 سے عبدالقادر خان کامیاب

این اے 184 ڈی جی خان سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عبدالقادر خان 1 لاکھ 10 ہزار 999 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امید وار علی محمد 1 لاکھ 9 ہزار 796 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستان کے امیدوار عرفان اللہ 8824 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 185 سے زرتاج گل کامیاب

این اے 185 ڈی جی خان 2 سے آزاد امیدوار زرتاج گل 94 ہزار 881 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ آزاد امیدوار محمود قادر خان 32 ہزار 929 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار سردار دوست محمد خان کھوسہ 26 ہزار 621 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 186 سے سردار اویس احمد خان لغاری کامیاب

این اے 186 ڈی جی خان 3 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سردار اویس احمد خان لغاری 99 ہزار 870 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سجاد حسین 97 ہزار 949 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے سردار دوست محمد خان کھوسہ 4079 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 187 سے عمار احمد خان لغاری کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 187 راجن پور 1 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار عمار احمد خان لغاری 78 ہزار 539 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیددوار محمد عاطف علی دریشک 67 ہزار 284 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے اطہر حسن خان گورچانی 18 ہزار 297 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 188 سے حفیظ الرحمان خان دریشک کامیاب

این اے 188 راجن پور 2 سے پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار حفیظ الرحمان خان دریشک 85 ہزار 936 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار سردار احمد علی خان دریشک 70 ہزار 206 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور پی پی پی پی کے لیاقت علی 13 ہزار 579 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 189 سے شمشیر علی مزاری کامیاب

این اے 189 راجن پور 3 سے آزاد امیدوار شمشیر علی مزاری 83 ہزار 74 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار سردار ریاض محمود خان مزاری 72 ہزار 584 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار زاہد خان مزار 10 ہزار 798 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 190 سے اعجاز حسین جکھرانی کامیاب

این اے 190 جیکب آباد سے پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار اعجاز حسین جکھرانی 1 لاکھ 26 ہزار 302 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار محمد میاں سومرو 60 ہزار 88 ووٹو کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 191 سے علی جان مزاری کامیاب

این اے 191 جیکب آباد کم کشمور سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار علی جان مزاری نے 1 لاکھ 3 ہزار 962 ووٹ لے کر الیکشن جیت لیا جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار شاہ زین خان 1 لاکھ 652 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور جماعت اسلامی کے امیدوار حافظ نصر اللہ 3123 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 192 سے میر شبیر علی بجارانی کامیاب

این اے 192 کشمور کم شکار پور سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار میر شبیر علی بجارانی نے 1 لاکھ 25 ہزار 197 ووٹ لے کر کامیابی حاصل کی جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار محمد ابراہیم جتوئی 76 ہزار 864 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 193 سے محمد شہریار خان مہر کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 193 شکار پور سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار محمد شہریار خان مہر 1 لاکھ 31 ہزار 82 ووٹ حاصل کر کے کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار راشد محمود سومرو 56 ہزار 153 ووٹ لے کر دوسرے اور مجلس وحدت مسلمینن کے امیدوار مقصود علی 3871 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 194 سے بلاول بھٹو زرداری کامیاب

این اے 194 لاڑکانہ 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار اور سابق وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری 1 لاکھ 35 ہزار 112 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستان کے امیدوار راشد محمود سومرو 35 ہزار 311 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار طارق حسین 5049 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 195 سے نظیر احمد بھگیو کامیاب

این اے 195 لاڑکانہ 2 میں تمام 358 پولنگ سٹیشنز کے غیر سرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق یپپلز پارٹی کے نظیر احمد بھگیو 133830 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے صفدر علی عباسی 48893 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 196 سے بلاول بھٹو زرداری کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقے این اے 196 قمبر شہداد کوٹ سے تمام 303 پولنگ سٹیشنز کا غیر سرکاری نتیجہ آ گیا، پاکستان پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو زرداری 85370 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے، جے یو آئی ایف کے ناصر محمود 34499 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 197 سے میر عامر علی خان مگسی کامیاب

این اے 197 قمبر شہداد کوٹ 2 سے پاکستان یپپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار میر عامر علی خان مگسی 88 ہزار 130 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جمعیت علمائے اسلام پاکستانن کے امیدوار 24 ہزار 199 ووٹوں کے ساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 198 سے خالد حمد خان لنڈ کامیاب

این اے 198 گھوٹکی سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار خالد حمد خان لنڈ 1 لاکھ 20 ہزار 259 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار عبدالحق عرف میاں مٹھا 90 ہزار 629 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار عبدالستار 10 ہزار 755 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 199 سے علی گوہر خان کامیاب

این اے 195 لاڑکانہ 2 میں تمام 367 پولنگ سٹیشنز کے غیر سرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق یپپلز پارٹی کے علی گوہر خان 154832 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ جمعیت علمائے اسلام کے عبدالقیوم 40204 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 200 سے نعمان اسلام شیخ کامیاب

این اے 200 سکھر 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار نعمان اسلام شیخ 97 ہزار 88 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے امیدوار دیدار علی 41 ہزار 911 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار گوہر علی کھوسو 19 ہزار 409 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 201 سے خورشید شاہ کامیاب

سکھر کے حلقہ این اے 201 کے تمام 300 پولنگ سٹیشنز کےغیر سرکاری اور غیر حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے خورشید شاہ 120219 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جے یو آئی کے صالح انڈھڑ 53302 ووٹوں کیساتھ دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 202 سے نفیسہ شاہ کامیاب

این اے 202 خیرپور 1 سے پیپلزپارٹی کی نفیسہ شاہ جیت گئیں، تمام 305 پولنگ سٹیشنز کے مکمل غیر حتمی غیر سرکاری نتیجے کے مطابق نفیسہ شاہ 121756 ووٹ لے کر کامیاب قرار پائیں جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے سید غوث علی شاہ 26745 ووٹ لےکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 203 سے پیر سید فضل علی شاہ جیلانی کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 203 خیر پور 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار پیر سید فضل علی شاہ جیلانی 1 لاکھ 28 ہزار 830 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس (جی ڈی اے) کے امیدوار پیر صدر الدین شاہ 98 ہزار 236 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار پیر سید علی رضا شاہ جیلانی 4571 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 204 سے جاوید علی شاہ جیلانی کامیاب

این اے 204 خیبر پور 3 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار سید جاوید علی شاہ جیلانی 1 لاکھ 12 ہزار 249 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس (جی ڈی اے) کے امیدوار معظم علی خان 87 ہزار 501 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار سید نیاز حسین شاہ جیلانی 3695 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 205 سے سید ابرار علی شاہ کامیاب

این اے 205 نوشہرو فیروز 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار سید ابرار علی شاہ 1 لاکھ 22 ہزار 675 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے اصغر علی شاہ 54 ہزار 404 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار گل حسن 25 ہزار 973 ووٹوں کے ساتھھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 206 سے ذوالفقار علی بیحان کامیاب

این اے 206 نوشہرو فیروز 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار ذوالفقار علی بیحان 1 لاکھ 35 ہزار 147 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے غلام مرتضیٰ خان جتوئی 77 ہزار 108 ووٹوں کے ساتھھ دوسرے اور تحریک لبیک پاکستانن کے محمد راشد شاہ 3165 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 207 سے آصف زرداری کامیاب

قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 207 میں تمام 346 پولنگ سٹیشنز کے غیر حتمی غیر سرکاری نتائج کے مطابق پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار و سابق صدر آصف زرداری کامیاب قرار پائے ہیں، آصف زرداری نے شہید بینظیر آباد سے این اے 207 کی نشست سے ایک لاکھ 46 ہزار 989 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں، آزاد امیدوار سردار شیر محمد رند بلوچ 51 ہزار 916 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 208 سے سید غلام مصطفیٰ شاہ کامیاب

این اے 208 شہید بینظیر آباد 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار سید غلام مصطفیٰ شاہ 1 لاکھ 25 ہزار 565 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے امیدوار سید زین العابدین 58 ہزار 785 ووٹ لے کرر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 209 سے شازیہ جنت مری کامیاب

این اے 209 سانگھڑ 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کی امیدوار شازیہ جنت مری 1 لاکھ 56 ہزار 2 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئیں جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے امیدوار محمد خان جونیجو 1 لاکھ 39 ہزار 604 ووٹوں کے ساتھ دوسرے پر رہے۔

این اے 210 سے صلاح الدین جونیجو کامیاب

این اے 210 سانگھڑ 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار صلاح الدین جونیجو 1 لاکھ 50 ہزار 195 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جی ڈی اے کی امیدوار سائرہ بانو 1 لاکھ 8 ہزار 194 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار منوچہر 7834 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 211 سے پیر آفتاب حسین شاہ جیلانی کامیاب

این اے 211 میر پور خاص 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار پیر آفتاب حسین شاہ جیلانی 84 ہزار 512 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار علی نواز شاہ جبکہ 53 ہزار 880 ووٹ لے کر دوسرے اور آزاد امیدوار عبدالحق 22 ہزار 524 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 212 سے میر منور علی ٹالپر کامیاب

این اے 212 میر پور خاص 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار میر منور علی ٹالپر 1 لاکھ 21 ہزار 972 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ آزاد امیدوار علی نواز شاہ 45 ہزار 321 ووٹ لے کرر دوسرے اور آزاد امیدوار فیصل کاچھیلو 20 ہزار 974 ووٹ لے کر تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 213 سے نواب محمد یوسف تالپور کامیاب

این اے 213 عمر کوٹ سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار نواب محمد یوسف تالپور 1 لاکھ 75 ہزار 162 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پاکستان مسلم لیگ ن کے امیدوار 44 ہزار 847 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار لالچند 37 ہزار 958 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 214 سے پیر امیر علی شاہ جیلانی کامیاب

این اے 214 تھرپارکر 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار پیر امیر علی شاہ جیلانی 1 لاکھ 29 ہزار 992 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹ الائنس کے امیدوار عبدالرزاق 60 ہزار 245 ووٹوں کے ساتھ دوسرے اور آزاد امیدوار مخدوم زین حسین قریشی 16 ہزار 844 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہے۔

این اے 215 سے مہیش کمار ملانی کامیاب

این اے 215 تھرپارکر 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی پارلیمنٹیرینز کے امیدوار مہیش کمار ملانی 1 لاکھ 32 ہزار 61 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ گرینڈ ڈیموکریٹ الائنس کے امیدوار ارباب غلام رحیم 1 لاکھ 13 ہزار 346 ووٹوں کے ساتھ دوسرےے اور آزاد امیدوار مہر النسا بلوچ 6638 ووٹوں کے ساتھ تیسرے نمبر پر رہیں۔

این اے 216 سے مخدوم جمیل الزماں کامیاب

این اے 216 مٹیاری میں تمام 320 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتیجے کے مطابق پیپلز پارٹی کے مخدوم جمیل الزماں 124536 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ مسلم لیگ ن کے بشیر احمد 80439 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 217 سے ذوالفقار بچائی کامیاب

این اے 217 ٹنڈو اللہ یار کے تمام 331 پولنگ سٹیشنز کے غیرحتمی اور غیرسرکاری نتیجے کے تحت پیپلز پارٹی کے ذوالفقار بچانی 115000 ووٹ لے کر جیت گئے، گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کی راحیلہ مگسی 69900 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 218 سے سید حسین طارق شاہ کامیاب

این اے 218 حیدر آباد کے تمام پولنگ سٹیشنز کے غیرحتمی اور غیرسرکاری نتیجے کے مطابق پیپلز پارٹی کے سید حسین طارق شاہ ایک لاکھ 8 ہزار 597 ووٹ لے کر جیت گئے جبکہ ان کے مدمقابل گرینڈ ڈیموکریٹک الائنس کے محمد رضوان 7 ہزار 942 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 219 سے عبدالعلیم خان کامیاب

این اے 219 حیدر آباد 1 کے تمام پولنگ سٹیشنز کے غیرحتمی اور غیرسرکاری نتیجے کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے عبدالعلیم خان 55 ہزار 55 ووٹ لے کر جیت گئے جبکہ تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار مستنصر بلہ 38 ہزار 315 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 220 سے سید وسیم حسین کامیاب

این اے 219 حیدر آباد 2 کے تمام پولنگ سٹیشنز کے غیرحتمی اور غیرسرکاری نتیجے کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان کے سید وسیم حسین 64 ہزار 531 ووٹ لے کر جیت گئے جبکہ تحریک انصاف کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار فیصل مغل 52 ہزار 25 ووٹ لیکر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 221 سے سید نوید قمر کامیاب

این اے 221 ٹنڈو محمد خان میں غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے سید نوید قمر ایک لاکھ 10 ہزار 892 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ ان کے مد مقابل جی ڈی اے کے محمد علی نواز تالپور 48 ہزار 325 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 222 سے میر غلام تالپور کامیاب

این اے 222 بدین میں غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے میر غلام الی تالپور ایک لاکھ 13 ہزار 916 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ ان کے مد مقابل جی ڈی اے کے میر حسین بخش تالپور 67 ہزار 10 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 223 سے حاجی رسول بخش چانڈیو کامیاب

این اے 223 بدین 1 میں غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے حاجی رسول بخش چانڈیو ایک لاکھ 15 ہزار 681 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ ان کے مد مقابل جی ڈی اے کے محمد علی نواز تالپور 79 ہزار 152 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 224 سے سید ایاز علی شاہ شیرازی کامیاب

این اے 224 سجاول میں غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے سید ایاز علی شاہ سیرازی ایک لاکھ 34 ہزار 6 ووٹ لے کر پہلے نمبر پر ہیں جبکہ جے یو آئی کے مولوی محمد صالح 15 ہزار 314 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 225 سے صادق علی میمن کامیاب

این اے 225 ٹھٹھہ میں تمام 425 پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے صادق علی میمن 14077 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ مسلم لیگ ن کے رسول بخش جاکھرو 28899 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 226 سے ملک اسد سکندر کامیاب

این اے 226 جامشورو میں غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے ملک اسد سکندر ایک لاکھ 65 ہزار 44 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ ان کے مد مقابل جی ڈی اے کے سید منیر حیدر شاہ 30 ہزار 876 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 227 سے عرفان علی لغاری کامیاب

این اے 225 دادو میں تمام پولنگ سٹیشنز کے غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے عرفان علی لغاری ایک لاکھ 4 ہزار 13 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ جی ڈی اے کے لیاقت علی جتوئی 93 ہزار 956 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 228 سے رفیق احمد جمالی کامیاب

این اے 228 دادو 1 میں غیرسرکاری و حتمی نتائج کے مطابق پیپلز پارٹی کے رفیق احمد جمالی 98 ہزار 451 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ ان کے مد مقابل جی ڈی اے کے کریم علی جتوئی 49 ہزار 103 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر ہیں۔

این اے 229 سے جام عبدالکریم بجار کامیاب

الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری غیر حتمی نتیجے کے مطابق کراچی کے حلقہ این اے 229 ملیر 1 سے پاکستان پیپلز پارٹی کے جام عبدالکریم بجار 55 ہزار 732 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ مسلم لیگ (ن) کے قادر بخش 21 ہزار 841 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 230 سے سید رفیع اللہ کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 230 ملیر 2 سے پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار سید رفیع اللہ 32 ہزار 99 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری غیر حتمی نتیجے کے مطابق پاکستان راہ حق پارٹی کے حافظ اورنگزیب فاروقی 15 ہزار 593 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 231 سے عبدالحکیم بلوچ فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 231 ملیر 3 سے پاکستان پیپلز پارٹی کے امیدوار عبدالحکیم بلوچ 43 ہزار 634 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے ہیں جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوارخالد محمود علی ایڈووکیٹ 43 ہزار 245 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 232 سے آسیہ اسحاق کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 232 کورنگی 1 سے متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان) کی امیدوار آسیہ اسحٰق 88 ہزار 260 ووٹ لے کر کامیاب ہوئیں، الیکشن کمیشن کی جانب سے جاری غیر حتمی نتیجے کے مطابق جماعت اسلامی کے توفیق الدین صدیقی 41 ہزار 106 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 233 کورنگی سے جاوید حنیف خان فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 233 کورنگی 2 سے متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان) کے امیدوار جاوید حنیف خان 1 لاکھ 39 ہزار 60 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ پی ٹی آئی کے آزاد امیدوارمحمد حارث58 ہزار 756 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 234 سے معین امیر پیرزادہ کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 234 کورنگی 3 سے متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان) کے امیدوار معین امیر پیرزادہ 73 ہزار 687 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ پی ٹی آئی کے آزاد امیدوارفہیم خان 43 ہزار 774 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 235 سے اقبال خان فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 235 ایسٹ ون سے متحدہ قومی موومنٹ (پاکستان) کے امیدوار محمد اقبال خان 20 ہزار 185 ووٹ لے کر کامیاب ہوئے جبکہ پی ٹی آئی کے آزاد امیدوار سیف الرحمان 14 ہزار167 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 236 سے حسان صابر کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 236 ضلع شرقی میں متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے حسان صابر 38 ہزار 871ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ جماعت اسلامی کے اسامہ رضی 21 ہزار 82 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 237 سے اسد عالم نیازی فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 237 ضلع شرقی میں پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے اسد عالم نیازی 40 ہزار 836 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار ظہورالدین 33 ہزار 321 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 238 سے صادق افتخار کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 238 ضلع شرقی 4 میں متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے صادق افتخار 54 ہزار 884 ووٹ لے کر کامیاب ہو گئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار حلیم عادل شیخ 36 ہزار 875 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 239 سے سردار نبیل گبول کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 239 ضلع جنوبی 1 میں پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے سردار نبیل گبول 40 ہزار 077 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد یاسر علی بلوچ 37 ہزار 234 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 240 سے ارشد عبداللہ فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 240 ضلع جنوبی 2 میں ایم کیو ایم کے ارشد عبداللہ 30 ہزار 573 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار محمد رمضان 27 ہزار 318 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 241 سے ڈاکٹر مرزا اختیار بیگ کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 241 ضلع جنوبی 3 میں پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے ڈاکٹر مرزا اختر بیگ 52 ہزار 456 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار خرم شیر زمان 48 ہزار 610 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 242 سے مصطفی کمال کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 242 کیماڑی 1 میں ایم کیو ایم کے سید مصطفی کمال 71 ہزار 767 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار دعا خان 53 ہزار 759 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 243 سے عبدالقادر پٹیل کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 243 کیماڑی 2 میں پاکستان پیپلزپارٹی پارلیمنٹرینز کے عبدالقادرپٹیل 60 ہزار 266 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار شجاعت علی 48 ہزار 690 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 244 سے فاروق ستار فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 244 سے ایم کیو ایم کے فاروق ستار 20 ہزار 048 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار آفتاب جہانگیر 14 ہزار073 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 245 سے سید حفیظ الدین کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 245 سے ایم کیو ایم کے سید حفیظ الدین 57 ہزار 356 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار عطاء اللہ 36 ہزار788 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 246 سے سید امین الحق کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 246 سے ایم کیو ایم کے سید امین الحق 74 ہزار 672 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ جماعت اسلامی کے امیدوار نعیم الرحمان خان 32 ہزار 332 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 247 سے خواجہ اظہار الحسن کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 247 سینٹرل 1 سے ایم کیو ایم کے خواجہ اظہار الحسن 65 ہزار 050 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار سید عباس حسنین 52 ہزار058 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 248 خالد مقبول صدیقی فاتح

کراچی کے حلقہ این اے 248 سینٹرل 2 سے ایم کیو ایم کے خالد مقبول صدیقی 1 لاکھ 30 ہزار 082 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار ارسلان خالد 86 ہزار 342 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 249 سے احمد سلیم صدیقی کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 249 سینٹرل 3 سے ایم کیو ایم کے احمد سلیم صدیقی 77 ہزار 529 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پی ٹی آئی کے حمایت یافتہ آزاد امیدوار عزیر علی خان 51 ہزار 152 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 250 سے فرحان چشتی کامیاب

کراچی کے حلقہ این اے 250 سینٹرل 4 سے ایم کیو ایم کے فرحان چشتی 79 ہزار 925 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ جماعت اسلامی کے امیدوار نعیم الرحمان خان 43 ہزار659 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 251 سے خوشحال خان کاکڑ کامیاب

 

حلقہ این اے 251 شیرانی ژوب قلعہ سیف اللہ سے پشتونخوا نیشنل عوامی پارٹی کے خوشحال خان کاکڑ 45 ہزار 712 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ جمعیت علماء اسلام کے امیدوار سید سمیع اللہ 44 ہزار763 ووٹ کیساتھ دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 252 سے سردار یعقوب خان ناصر کامیاب

بلوچستان کے حلقہ این اے 252 وارشک میں مسلم لیگ (ن) کے اُمیدوار سردار یعقوب خان ناصر 53 ہزار 783 ووٹ لیکر کامیاب ہو گئے جبکہ ان کے آزاد امیدوار سردار بابر خان موسیٰ خیل 52 ہزار 992 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

این اے 260 سے محمد عثمان بادینی کامیاب

بلوچستان کے علاقوں چاغی، نوشکی، خاران اور واشک پر مشتمل حلقہ این اے 260 میں جے یو آئی کے امیدوار محمد عثمان بادینی 42 ہزار 670 ووٹوں کیساتھ رکن قومی اسمبلی منتخب ہو گئے جبکہ ان کے مدمقابل مسلم لیگ (ن) کے امیدوار سردار فتح محمد حسنی 35 ہزار 625 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے ہیں۔

این اے 261 سے اختر مینگل کامیاب

الیکشن کمیشن کی ویب سائٹ کے مطابق بلوچستان سے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 261 قلات سے بلوچستان نیشنل پارٹی کے اختر مینگل 27 ہزار 331 ووٹ لے کر کامیاب ہوگئے جبکہ پیپلز پارٹی کے سردار ثنا اللہ زہری 24 ہزار 40 ووٹ لے کر دوسرے نمبر پر رہے۔

This website uses cookies to improve your experience. We'll assume you're ok with this, but you can opt-out if you wish. Accept